اسلام آباد ۔ پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی ایڈیشنل جنرل سیکرٹری سیف اللہ خان نیازی اپنے پارٹی عہدے سے مستعفیٰ ہو گئے ۔ ذرائع کے مطابق انہوں نے 16 ستمبر 2016 ء کی شام 4 بجے اپنے پارٹی عہدے سے استعفیٰ دیا تھا۔ جس کے بارے میں آج(17 ستمبر2016ء) کو پریس کو آگاہ کر دیا گیا ۔ سیف اللہ نیازی کا شمارپارٹی کے بانی اور بنیادی رہنماؤں میں ہوتا ہے ۔ وہ عمران خان کے انتہائی قریبی ساتھی ہیں ۔ ذرائع کے مطابق سیف اللہ نیازی کو بعض پارٹی معاملات سے اختلاف تھا ۔ گذشتہ دنوں پارٹی کے مرکزی جنرل سیکرٹری جہانگیر ترین کی جانب سے لیبر ونگ ، یوتھ ونگ اور ویمن ونگ کی تنظمیں تحلیل کیئے جانے کے معاملے پر بھی انہوں نے اختلاف کیا تھا ۔ سیف اللہ نیازی پارٹی میں جنرل سیکرٹری جہانگیر ترین کی پالیسیوں سے شدید اختلاف رکھتے تھے پارٹی کے بنیادی کارکنوں اور بانی رہنماؤں کی طرح وہ بھی اس موقف کے حامی تھے کہ جہانگیر ترین پارٹی میں اپنے گروپ اور لابی کو مضبوط کر رہے ہیں ۔سیف اللہ نیازی کو اس امر پر بھی اعتراض تھا کہ جہانگیر ترین عمران خان کے آبائی حلقہ میانوالی کے معاملات میں بھی مداخلت کرتے ہیں اور وہاں بھی اپنی لابی اور گروپ کو مضبوط کرنے کی کوشش کر رہے ہیں ۔ تازہ ترین اطلاعات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کے چیئر مین عمران خان نے سیف اللہ نیازی کا استعفیٰ ابھی تک منظور نہیں کیا ۔ بعض ذرائع اس امکان کا اظہار بھی کر رہے ہیں کہ سیف اللہ نیازی کسی وقت امریکہ روانہ ہو سکتے ہیں ۔

حصہ